Aao Gheebat Karain

کبھی کبھار نہیں بلکہ اکثر اوقات ایسا بھی ہوتا ہے کہ گفتگو میں زیرغور موضوعات کا سٹاک ختم ہو جاتا ہے تو پھر دوسرے فریق کو اس کے کسی خاص عزیز کے بارے میں غیبت کرنے کے باقاعدہ دعوت دی جاتی ہے۔ بات کا آغاز کچھ اس طرح سے ہوتا ہے۔ ہاں سناؤ تو خیراں تمہاری ساس کیسی ہے؟ جیسے کسی نے بھڑ کے چھتے کو چھیڑ دیا ہو وہ شروع ہو جاتی ہے۔ دوسری سنتے سنتے تھک جاتی ہے مگر خیراں کا سلسلہ کلام ختم ہونے میں نہیں آتا۔

Category:

ao-gheebat-karein

Reviews


There are no reviews yet.

Be the first to review “Aao Gheebat Karain”